سچ ثابت ہوئی ایم آئی ایم سربراہ اویسی کی پیشن گوئی ،جانیئے کیا کہاتھا انہوں نے کرناٹک اسمبلی انتخابات کے دوران

جے ڈی ایس کے بارے میں لوگ کہ رہے ہیں کہ وہ کنگ میکر بنے گی لیکن میں کہ رہاہوں کے جے ڈی ایس کنگ میکر نہیں بلکہ کنگ بنے گی ۔

نئی دہلی(ملت ٹائمز/عامر ظفر)

کرناٹک اسمبلی انتخابات میں مجلس اتحاد المسلمین کے سربراہ اسد الدین اویسی نے براہ راست الیکشن لڑنے کے بجائے جنتا د ل سیکولرکی حمایت کی تھی ۔مختلف ریلیاں منعقد کرکے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے مسلمانوں اور عوام سے اپیل کی تھی کہ بی جے پی اور کانگریس دونوں کے ہاتھ مسلمانوں کے خون سے رنگین ہیں ۔آپ ان دونوں کو چھوڑ کر جے ڈی ایس کو ووٹ دیں ،یہی پارٹی آپ کی خیرخواہی کرے گی ۔ایک ریلی میں انہوں نے یہ بھی کہاتھاکہ جے ڈی ایس کے بارے میں لوگ کہ رہے ہیں کہ وہ کنگ میکر بنے گی لیکن میں کہ رہاہوں کے جے ڈی ایس کنگ میکر نہیں بلکہ کنگ بنے گی ۔
اسد الدین اویسی نے آج فیس بک پر 55 منٹ کی یہ ویڈو کلپ پوسٹ کی ہے اور کیپشن میں صر ف اتنا لکھا کہ ایک پرانی کلپ ۔حالاں کہ اس دوران اسد الدین اویسی پر بعض حلقوں اور مسلم دانشوران کی جانب سے یہ الزام بھی عائد کیا گیا کہ وہ پس پردہ بی جے پی کو فائدہ پہونچارہے ہیں کیوں کہ انتخابات کے دوران یہ کہاجارہاتھاکہ جے ڈی ایس بی جے پی کے ساتھ مل سکتی ہے ۔
واضح رہے کہ جے ڈی ایس کرناٹک انتخاب میں اب کنگ بن گئی ہے ۔کسی پارٹی کو واضح اکثریت نہ ملنے کے بعد کانگریس نے جے ڈی ایس کو غیر مشروط کی پیشکش کردی اور کہاکہ ایچ ڈیو گوڑاکے بیٹے کمار سوامی وزیر اعلی بنے جس کے بعد کمار سوامی نے گورنر کی خدمت میں 118 ایم ایل اے کے ساتھ حکومت سازی کا دعوی پیش کردیاہے ۔دوسری طرف بی جے پی نے بھی سب سے بڑی پارٹی ہونے کی حیثیت گورنر کی خدمت میں دعوی پیش کیا ہے ۔

Short Clip, AIMIM President Barrister Asaduddin Owaisi in JD(s) Election campaign in Bengaluru, Karnataka. ‬#ElectionKarma #karnatakaelections2018 #karnatakaresults #Owaisi

Posted by Asaduddin Owaisi on Tuesday, May 15, 2018

کرناٹک میں کسی پارٹی کو واضح اکثریت نہیں ملی ہے ۔ حکومت سازی کیلئے 112 سیٹوں پر جیت ضروری ہے ۔104 سیٹوں کے ساتھ بی جے پی سب سے بڑی پارٹی ہے ۔کانگریس 78 سیٹوں کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہے جبکہ جے ڈی ایس 37 سیٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر ہے لیکن رینک میں پہلے نمبر پر جے ڈی ایس آگئی ہے اور کانگریس کی غیر مشروط کی حمایت کے بعد کمار سوامی کی قیادت میں جے ڈی ایس کی حکومت بننا تقریبا طے ہے ۔

ملت ٹائمز ایک آزاد،غیر منافع بخش ادارہ ہے جس کی آمدنی کا کوئی ذریعہ نہیں۔اسے جاری رکھنے کیلئے مالی مدد درکارہے۔یہاں کلک کرکے تعاون کریں
Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *