زبان و ادب
  • غزل

    ترے خیال سے نکلیں تو داستاں ہو جائیں نصیب ہو جو ترا ساتھ، جاوداں ہو جائیں   ہماری راکھ اڑانے کو آئے گا وہ ...

    ترے خیال سے نکلیں تو داستاں ہو جائیں نصیب ہو جو ترا ساتھ، جاوداں ہو جائیں   ہماری راکھ اڑانے کو آئے گا وہ شخص سو اس سے پہلے بھلا کیسے ہم دھواں ہو جائیں؟   تمہارے ملنے تلک قادر الکلام رہیں تمہارے سامنے ...

    Read more
  • غزل

      پاس ہر شخص کے زر ہو یہ ضروری تو نہیں ہر کوئی شاہ ظفر ہو یہ ضروری تو نہیں اپنی خودّاری کا رکھتا ہوں ...

      پاس ہر شخص کے زر ہو یہ ضروری تو نہیں ہر کوئی شاہ ظفر ہو یہ ضروری تو نہیں اپنی خودّاری کا رکھتا ہوں ہمیشہ احساس تیرے درپر مرا سر ہو یہ ضروری تو نہیں مانگتے رہتے ہیں دن رات دعائیں کچھ لوگ سب دعاؤ ...

    Read more
  • نظم   اویسی بول رہا ہے

    نظم اویسی بول رہا ہے دلت مسلم کے دل کا پیار جگا دو بڑھ کے اب بھی یار گرا دو نفرت کی دیوار بنا دو جنگل کو ...

    نظم اویسی بول رہا ہے دلت مسلم کے دل کا پیار جگا دو بڑھ کے اب بھی یار گرا دو نفرت کی دیوار بنا دو جنگل کو گلزار سمئے پٹ کھول رہا ہے اویسی بول رہا ہے یہ فرضی سیکولر سرکار کرے نفرت کا کاروبار مسلماں غربت ...

    Read more
  • بیمار قوم پرستی کی علامت کیوں بن گئے جوہر؟

    محمد علم اللہ  کچھ شخصیات ایسی ہوتی ہیں، جن کا نقش آپ کے ذہن پر کنداں ہوجاتا ہے اور پھر وہ مٹائے نہیں مٹت ...

    محمد علم اللہ  کچھ شخصیات ایسی ہوتی ہیں، جن کا نقش آپ کے ذہن پر کنداں ہوجاتا ہے اور پھر وہ مٹائے نہیں مٹتا۔ اُنھی میں سے ایک مولانا محمد علی جوہر کی شخصیت ہے۔ مجھے نہیں معلوم کہ میں نے مولانا محمد علی ...

    Read more
  • اردگانِ ہند اسد الدین اویسی

    فضیل احمد ناصری الہیٰ! بھیج دے ملت کو کوئی راہ داں اپنا حوادث کی طرف ہےجادہ پیما کارواں اپنا نظرترچھی کیے ...

    فضیل احمد ناصری الہیٰ! بھیج دے ملت کو کوئی راہ داں اپنا حوادث کی طرف ہےجادہ پیما کارواں اپنا نظرترچھی کیےبیٹھےہیں ہم پرپھرصنم خانے ابولہبی شراروں کی ہے زد میں آشیاں اپنا زمانہ پیکرِ تصویر ہے الکفر ملۃ ...

    Read more
  • غزل

    غزل  وفا کرنا، سِتم سہنا نہیں ہے مُجھے اَب اور کُچھ کَہنا نہیں ہے بَھلا میں کیوں تُمہارے خواب دیکھوں تُمہ ...

    غزل  وفا کرنا، سِتم سہنا نہیں ہے مُجھے اَب اور کُچھ کَہنا نہیں ہے بَھلا میں کیوں تُمہارے خواب دیکھوں تُمہارے ساتھ جب رہنا نہیں ہے مری آنکھیں حقیقت آشنا ہیں خیالی موج میں بہنا نہیں ہے ِشِکایت کیوں تُجھ ...

    Read more
  • نزار قبانی: جدتِ افکار اور جرأتِ اظہار کا استعارہ!

    نایاب حسن امتیاز: معروف عربی شاعر نزارقبانی کا عملی دورانیہ بیسویں صدی کے نصفِ ثانی کو محیط ہے،ان کے اشعا ...

    نایاب حسن امتیاز: معروف عربی شاعر نزارقبانی کا عملی دورانیہ بیسویں صدی کے نصفِ ثانی کو محیط ہے،ان کے اشعار،نقوشِ فکر اور ان کے رنگارنگ تخیلات مسلسل ایک نسل سے دوسری نسل کی طرف منتقل ہورہے ہیں، نزار قب ...

    Read more
  • انقلابی شاعر قاضی نذرالاسلام کے آستانے پر حاضری: احتجاج اور روحانیت کی نغمگی

    صفدر امام قادری کسی ملک ارو قوم کے اس جذبے کو پہچاننا ہو کہ یہ اپنے اسلاف کو کس محبّت اور چاؤ سے یاد رکھ ...

    صفدر امام قادری کسی ملک ارو قوم کے اس جذبے کو پہچاننا ہو کہ یہ اپنے اسلاف کو کس محبّت اور چاؤ سے یاد رکھتی ہے تو اس کے کُتب خانوں ، عجائب گھر اور قومی یادگاروں کو دیکھ لینا کافی ہوتا ہے۔قدیم تاریخ کے ...

    Read more
  • غزل   مجھ کو عذاب جاں نے سنبھلنے نہیں دیا توبہ کا در کھلا تھا نکلنے نہیں دیا

    غزل مجھ کو عذاب جاں نے سنبھلنے نہیں دیا توبہ کا در کھلا تھا نکلنے نہیں دیا اشکوں کے لالے پڑگئے مجھ کو تما ...

    غزل مجھ کو عذاب جاں نے سنبھلنے نہیں دیا توبہ کا در کھلا تھا نکلنے نہیں دیا اشکوں کے لالے پڑگئے مجھ کو تمام شب خود کو جو ایک شام پگھلنے نہیں دیا ہنستے ہوئے لبوں نے تو چاہا تھا چومنا کمبخت اجنبی نے مچلن ...

    Read more
  • غزل

    غزل کبھی صورت دکھاتا ہے، کبھی پردہ گراتا ہے وہ مجھ سے پیار کرتا ہے کہ میرا دل جلاتا ہے نہیں ممکن حقائق کا ...

    غزل کبھی صورت دکھاتا ہے، کبھی پردہ گراتا ہے وہ مجھ سے پیار کرتا ہے کہ میرا دل جلاتا ہے نہیں ممکن حقائق کا چھپا لینا محبت میں ہر اک اظہاریہ سچ بولتا نغمہ سناتا ہے ترے پہلو میں وہ تسکین قدرت نے عطا کی ہ ...

    Read more