پرتاپ گنج اور للت گرام کے درمیان مدہوبنی میں مولانا آزاد ہالٹ کا مطالبہ سیمانچل ڈیلوپمنٹ فرنٹ کے جنرل سیکرٹری کی ڈی آر یم سمستی پور سے ملاقات

پرتاپ گنج اور للت گرام کے درمیان مدہوبنی میں مولانا آزاد ہالٹ کا مطالبہ سیمانچل ڈیلوپمنٹ فرنٹ کے جنرل سیکرٹری کی ڈی آر یم سمستی پور سے ملاقات

سیپول: (ملت ٹائمز) ضلع سپول کے مدہوبنی گاؤں میں واقع تعلیمی ادارہ جامعۃ القاسم دارالعلوم الاسلامیہ سےسب واقف ہیں، کہ دور دراز سےعلم حاصل کرنے والے طلبہ یہاں آکر اپنی علمی پیاس بجھاتے ہیں، مزید یہ کہ جامعۃ القاسم دارالعلوم الاسلامیہ کے عزائم اور منصوبے بڑے ہیں، مستقبل قریب میں ایک یونیورسٹی اور چیری ٹیبل ہاسپٹل کا قیام عمل میں آئے گا، جس کی کوشش جاری ہے، اسے دیکھتے ہوئے یہاں ایک اسٹیشن کی سخت ضرورت ہے،اس سلسلے میں سیمانچل ڈیلوپمنٹ فرنٹ کے جنرل سیکرٹری شاہ جہاں شاد کی قیادت میں ایک وفد ڈی آر یم سمستی پور اور ڈی سی ایم سے ملاقات کیااور زمینی صورت حال سے واقف کرایا، جنرل سیکرٹری شاہ جہاں شاد نے ریلوے کے اعلی حکام کو یہ بتایا کہ اس تعلیمی ادارے کی ترقی اور منصوبہ کو دیکھتے ہوئے ایک اسٹیشن کی ضرورت ہے، تاکہ طلبہ، اساتذہ، کارکنان ،زائرین ہاسپٹل کے قیام کے بعد مریض، ڈاکٹر اور عملہ کوسہولت ہو،اس موقع پر سیمانچل ڈیلوپمنٹ فرنٹ کی جانب سے مطالبہ کاایک لیٹر دیا گیا جس میں لکھا تھا کہ وزیر تعلیم بھارت رتن مولانا ابوالکلام آزاد کے نام سے مدہوبنی میں “مولانا آزاد ہالٹ” ہو، دوسرے یہ کہ سہرسہ سے فاربس گنج تک ہر دو اسٹیشن کے بیچ ایک ہالٹ ہے، صرف پرتاپ گنج اور للت گرام کے درمیان نہیں ہے، اور ابھی تو سرائے گڑھ سے فاربس گنج تک ریلوے کا کام چل رہا ہے، جس سےآسانی سے ہوسکتا ہے، اعلیٰ حکام نے یقین دلایا کہ کام ہوگا، وفد میں جامعۃ القاسم دارالعلوم الاسلامیہ کے نائب مہتمم قاری ظفر اقبال مدنی، شیخ الجامعہ مفتی محمد انصار قاسمی، مولانا محمد آصف ندوی، ڈاکٹر حفیظ قیصر، اور عبدالملک وغیرہ تھے۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *