اتر پردیش، مدھیہ پردیش اور راجستھان میں آسمانی بجلی گرنے سے 68 لوگوں کی موت

اتر پردیش، مدھیہ پردیش اور راجستھان میں آسمانی بجلی گرنے سے 68 لوگوں کی موت

خبروں کے مطابق تین ریاستوں میں بجلی گرنے سے 68 لوگوں کی موت ہو گئی ہے، جس میں سب سے زیادہ اتر پردیش میں 41 کی موت ہوئی ہے۔

اتر پردیش ، مدھیہ پردیش اور راجستھان میں بجلی گرنے سے 68 لوگوں کی موت ہو گئی ہے۔ نیوز پورٹل کی خبر کے مطابق اکیلے اتر پردیش میں الگ الگ اضلاع میں بجلی گرنے سے 41 افراد کی موت ہو گئی ہے۔ اتر پردیش حکومت کے مطابق اکیلے پریاگ راج یعنی الہ آباد میں سب سے زیادہ 14 افراد کے بجلی گرنے سے موت ہو گئی ہے، کانپور دیہات اور فتحپور میں پانچ پانچ افراد کی موت ہو ئی ہے، کوشامبی میں چار افراد، فیروز آباد میں تین افراد، اناؤ اور حمیر پور میں دو دو افراد، کانپور شہر، ہردوئی و مرزا پور میں ایک ایک فرد کی موت ہوئی ہے۔
ادھر راجستھان میں بجلی گرنے سے 20 افراد کی موت ہو گئی ہے۔ اتوار کو آسمانی بجلی گرنے سے جے پور میں 11، دھولپور میں تین، کوٹا میں چار، جھالاواڑ میں ایک اور باراں میں ایک فرد کی موت ہوئی ہے۔ راجستھان حکومت نے مرنے والے کے اہل خانہ کو پانچ لاکھ روپے کا معاوضہ دینے کا اعلان کیا ہے۔ راجستھان کے آمیر محل کے واچ ٹاور میں زیادہ تر نوجوان قلعہ کے پاس ایک پہاڑی پر موسم کے مزہ لے رہے تھے۔ ان میں سے کچھ لوگ سیلفی لے رہے تھے۔ شام کے وقت وہاں آسمانی بجلی گری اور کئی لوگ وہیں گر گئے۔ وہیں مدھیہ پردیش میں بجلی گرنے سے سات افراد کے مرنے کی خبر ہے۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *