گجرات میں 93 سیٹوں کے لئے ووٹنگ شروع، وزیراعلیٰ سمیت 9 وزراء کی قسمت داؤ پر

گجرات اسمبلی انتخابات کے دوسرے مرحلے کے لیے آج 93 اسمبلی سیٹوں پر ووٹنگ شروع ہو گئی ہے اور صبح سے ہی کئی بوتھوں پر قطاریں نظر آ رہی ہیں ۔ وزیر اعظم نریندر مودی، ایت شاہ اور گجرات کے کئی بزرگ رہنما آج اپنے ووٹ کا استعمال کریں گے۔ پی ایم مودی احمد آباد کے رانیپ میں نشان اسکول میں اپنے حق رائے دہی کا استعمال کریں گے۔

گجرات مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ کی آبائی ریاست بھی ہے اس لئے وہ بھی آج ووٹ کریں گے۔گجرات میں آخری مرحلے میں ووٹ ڈالنے والے دیگر نمایاں ناموں میں اتر پردیش کی گورنر آنندی بین پٹیل، اشودان گڑھوی، گجرات کانگریس کے صدر جگدیش ٹھاکر اور کرکٹرز عرفان پٹھان، ہاردک پانڈیا اور کرونل پانڈیا شامل ہیں۔ کانگریس لیڈر اور ایم پی شکتی سنگھ گوہل اور سابق وزیر اعلیٰ شنکر سنگھ واگھیلا بھی آج اپنے حق رائے دہی کا استعمال کریں گے۔

2017 کے گجرات انتخابات میں بی جے پی نے کل 182 میں سے 99 سیٹیں جیتی تھیں۔ بی جے پی گزشتہ 27 سالوں سے اقتدار میں ہے اور نریندر مودی 2001 سے 2014 تک گجرات کے سب سے طویل عرصے تک وزیر اعلیٰ رہے ہیں۔

گجرات انتخابات کے دوسرے مرحلے میں 61 جماعتوں کے 833 امیدوار میدان میں ہیں، جن کی قسمت کا فیصلہ 2.51 کروڑ سے زیادہ ووٹر کریں گے۔الیکشن کمیشن نے 26,409 پولنگ اسٹیشن قائم کیے ہیں اور ووٹنگ کے لیے تقریباً 36,000 الیکٹرانک ووٹنگ مشینیں (ای وی ایم) استعمال کی جائیں گی۔انتخابات کے پیش نظر 14 اضلاع میں 84 ہزار سے زائد پولنگ افسران کو تعینات کیا گیا ہے۔

SHARE
ملت ٹائمز میں خوش آمدید ۔ اپنے علاقے کی خبریں ، گراﺅنڈ رپورٹس اور سیاسی ، سماجی ،تعلیمی اورادبی موضوعات پر اپنی تحریر آپ براہ راست ہمیں میل کرسکتے ہیں ۔ millattimesurdu@gmail.com