غزہ کے محاصرے کے تسلسل پر حماس کی اسرائیل کو وارننگ

غزہ کے محاصرے کے تسلسل پر حماس کی اسرائیل کو وارننگ

غزہ: اسلامی تحریک مزاحمت “حماس” نے متنبہ کیا ہے کہ غزہ کی پٹی کے انسانی بحرانوں کو ختم کرنے میں ناکامی کا ذمہ دار اسرائیل ہوگا۔ اگر بحران ختم نہ کیے گئے تو غزہ کا علاقہ قابض اسرائیل کے سامنے آتش فشاں بن کر پھٹ جائے گا۔حماس زور دیتے ہوئے کہا کہ  فلسطینی عوام محاصرے کو توڑنے کا اپنا حق محفوظ رکھتے ہیں۔

اسرائیلی حکومت نے غزہ کی پٹی کو قطری گرانٹ میں داخلے میں تاخیر پر تبصرہ کرتے ہوئے حماس کے ترجمان عبد اللطیف القانوع نے کہاکہ غزہ پر سہولت کاری اور محاصرے کو توڑنے کے اقدامات ہمارے فلسطینی عوام کا حق ہے۔ یہ حق کسی کا بھی احسان نہیں ہے۔
قدس پریس نے القانوع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ ہمارے فلسطینی عوام کو ایک عزیز اور باوقار زندگی گزارنے کا حق حاصل ہے۔ صہیونی قابض ریاست صرف غزہ کی پٹی کا محاصر  توڑنے اور بحرانوں کو ختم کرنے کے اقدامات  کے سوا کچھ نہیں کرسکتا۔
انہوں نے  کہ غزہ کی پٹی پر مزید دباؤ قابض دشمن کے سامنے میں ایک دھماکہ پیدا کرے گا۔ غزہ پر عاید پابندیوں میں نرمی  ہمارے فلسطینی عوام کا حق ہے اور ہم اپنے فلسطینی عوام کے ساتھ اپنے فلسطینی عوام کے حقوق چھیننے کے لئے جدوجہد کریں گے۔
حماس کے ترجمان نے وعدہ کیا کہ غزہ پر آئندہ آنے والی سہولیات فلسطینی عوام کےاستحکام اور قابض دشمن کے اہداف کے حصول میں ناکامی کے دائرہ کار میں آتی ہیں اور اس پر کوئی سمجھوتا نہیں کیا جاسکتا۔

Comments: 0

Your email address will not be published. Required fields are marked with *