اویسی کا بی جے پی پر بڑا حملہ، کہا – کانگریس سے مکت نہیں ہندوستان سے مسلمانوں کو ختم کرنا چاہتے ہیں امت شاہ

آئندہ سال ہونے والے لوک سبھا اور اس سال پانچ ریاستوں کے اسمبلی انتخابات سے ٹھیک پہلے سیاسی پارٹیوں کی جانب سے پولرائزیشن کرنے کی کوشش تیز ہو گئی ہے. ایک طرف جہاں بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) ملک بھر میں رام مندر کے مسئلے کو ایک بار پھر ہوا دے کر اہم مسائل سے لوگوں کی توجہ ہٹانے کی کوشش کر رہی ہے،

تو وہیں اسد الدین اویسی نے بی جے پی کے قومی صدر امت شاہ پر بڑا حملہ بولا ہے. اویسی نے الزام لگایا ہے کہ امت شاہ بھارت کو مسلم مکت بنانا چاہتے ہیں. اویسی نے الزام لگایا کہ اقلیتوں کو ڈرانے کی کوشش کی جا رہی ہے. اویسی نے دیوالی کی رات بدھ (7 نومبر) کو حیدرآباد میں ایک ریلی میں تقریر کے دوران یہ بیان دیا.

انگریزی نیوز چینل ٹائمس ناؤ کے مطابق، اویسی نے ریلی سے خطاب کرتے ہوئے کہا، ‘امت شاہ آکے تلنگانہ میں بولے رہے ہیں کہ حیدرآباد کو مجلس سے آزاد کروں گا. کون سامکت کریں گے آپ؟ کہاں سے آزاد کریں گے آپ …؟ آپ مجلس مکت نہیں آپ ہندوستان سے مسلمانوں کو مکت کرنا چاہتے ہیں

اویسی نے کہا کہ آپ کانگریس آزاد نہیں ہندوستان سے مسلمانوں کو ختم کرنا چاہتے ہیں. مسلمانوں کے ہندوستان کے آئین نے حق دیا ہے. انتخابی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے اس دوران اویسی نے امت شاہ کے علاوہ سابق وزیر اعظم نرسمہا راؤ کو بھی نشانہ بنایا.

ملت ٹائمز ایک آزاد،غیر منافع بخش ادارہ ہے جس کی آمدنی کا کوئی ذریعہ نہیں۔اسے جاری رکھنے کیلئے مالی مدد درکارہے۔یہاں کلک کرکے تعاون کریں
Comments: 3

Your email address will not be published. Required fields are marked with *